• صارفین کی تعداد :
  • 10049
  • 8/8/2011
  • تاريخ :

کتاب

کتاب

ايک پڑوسن نے دوسري سے ايک کتاب پڑھنے کے لیے مانگي- دوسري نے کہا ”‌ بہن ميں کتاب ديا نہيں کرتي- آپ يہاں بيٹھ کر جتني چاہيں پڑھ ليں-”

چند روز بعد دوسري پڑوسن پہلي کے گھر گئي اور جھاڑو مانگي-  پہلي نے کہا ”‌ بہن ميں کسي کو جھاڑو نہيں ديا کرتي ، آپ کو جتني جھاڑو ديني ہو، يہاں ميرے گھر ميں دے ديں-”

 

بشکريہ ؛ بزم ساتهي


متعلقہ تحريريں:

ميں

بال

فرض کر ليں

اوۓ آہو يار

ميرا تخلص " شوھر "