• صارفین کی تعداد :
  • 659
  • 7/1/2016
  • تاريخ :

اسرائيل آئندہ 25 سال ميں علاقائي جغرافيہ سے محو ہو جائےگا

اسرائیل آئندہ 25 سال میں علاقائی جغرافیہ سے محو ہوجائے گا


سپاہ پاسداران انقلاب اسلامي نے ايک بيان ميں تاکيد کي ہےکہ بيت المقدس کي آزادي اور اسرائيل کي نابودي کے آثار نماياں ہو گئے ہيں اور اسرائيل آئندہ 25 سال کے دوران علاقائي جغرافيہ سے محو ہو جائے گا۔

مہر خبررساں ايجنسي کي رپورٹ کے مطابق سپاہ پاسداران انقلاب اسلامي نے ايک بيان ميں تاکيد کي ہےکہ بيت المقدس کي آزادي اور اسرائيل کي نابودي کے آثار نماياں ہو گئے ہيں اور اسرائيل کي ظالم و جابر حکومت آئندہ 25 سال کے دوران علاقائي جغرافيہ سے محو ہو جائے گا۔ سپاہ نے بيان ميں کہا ہے کہ حضرت امام خميني (رہ) نے 37 سال قبل رمضان المبارک کے آخري جمعہ کو عالمي يوم قدس کے نام سے موسوم کرکے مسئلہ فلسطين کو فراموش کرنے کي ہر سازش کو ناکام بنا ديا اور اس طرح انھوں نے ہميشہ کے لئےعالم اسلام کي توجہ مسئلہ فلسطين کي طرف مبذول کر دي،  آج عالم اسلام پہلے کي نسبت ہر لحاظ سے قوي ، مضبوط اور سامراجي طاقتوں کي آنکھوں ميں آنکھيں ڈال کر بات کرنے کي بھر پور صلاحيت رکھتا ہے اور انقلاب اسلامي ايران کے سائے ميں مسئلہ فلسطين حل ہو جائے گا ۔اسرائيل کي خونخوار ، ظالم و جابر اور بچوں کي قاتل حکومت صفحہ ہستي سے محو ہو جائے گي اور فلسطيني قوم کو اسرائيل کي خونخوار اور ظالم حکومت سے نجات مل جائے گي۔ سپاہ پاسداران نے تمام مسلمانوں بالخصوص ايراني عوام سے يوم قدس کي ريليوں ميں بھر پور شرکت کرنے کي سفارش کي ہے۔