• صارفین کی تعداد :
  • 9634
  • 8/4/2011
  • تاريخ :

کيلا

کیلا

ايک صاحب چھلکے سميت کيلا کھانے لگے-

کسي نے انہيں ٹوکا ”‌ اسے چھيل توليں-”

وہ بولے-”‌ چھيلنے کي کيا ضرورت ہے، مجھے معلوم ہے اس کے اندر کيا ہے؟”

 

بشکريہ ؛ بزم ساتهي


متعلقہ تحريريں:

اوۓ آہو يار

ميرا تخلص " شوھر "

دو شاعروں ميں فرق

عدم يہ ہے تو وجود کيا ہو گا؟

سعادت مند والدين