• صارفین کی تعداد :
  • 3097
  • 1/19/2011
  • تاريخ :

ایران کے نباتات

گندم اور جو

اس وقت دنیا بھر میں پائی جانے والی بہت سی نباتات ایسی ہیں جو سب سے پہلے ایران اور وسطی ایشیا میں کاشت کی گئیں ۔ یہاں سے بعد میں ان نباتات کو چین لے جایا گیا ۔ ہخامنشی دور حکومت میں یہ نباتات ایران سے یورپ تک بھی جا پہنچیں ۔ جب ایران میں  سب سے پہلے اسلامی حکومت وجود میں آئی تو ان نباتات کو افریقہ اور سپین تک بھی رسائی مل گئ ۔ ان نباتات میں سے کچھ پر ہم مختصر بات کرتے ہیں ۔

گندم اور جو

غذائی ضروریات کے لیۓ دنیا بھر میں اگائی جانے والی ان اجناس سے انسان کا بہت قدیم تعلق ہے ۔ گندم اور جو کے متعلق یہی کہا  جاتا ہے کہ سب سے پہلے انہیں ایران میں کاشت کیا گیا  اور پھر یہ اجناس ایران سے مصر منتقل ہو‏ئیں ۔ تاریخی اور آثار قدیمہ کے ماہرین کے مطابق آذربائیجان میں جب تاریخی مقامات کی کھدائی کی گئی تو بحیرہ ارومیہ کے نزدیک بعض جگہوں پر غلہ جات کے آثار ملے ۔ اس سے یہ بات آسانی سے سمجھ آ جاتی ہے کہ گندم کا وجود اس علاقے میں آج سے پانچ ہزار سال قبل بھی تھا ۔ زرتشتیوں کی مذھبی کتاب  میں لکھا ہے کہ " کیومرث " کے دور حکومت میں جب  پہلی گاۓ وجود میں آئی تو اس کے  ساتھ 55 اقسام کی گندم اور  چند نباتات  بھی پیدا ہوئیں ۔ اسی طرح  " جو " کے آثار بھی قدیم زمانے سے ہی ایرانی تاریخ  میں ملتے ہیں ۔ مشرقی علاقوں کے صحراؤں کی کھدائی کے دوران ایک تنور سے " جو "  کی باقیات اور چھٹی صدی قبل مسیح سے متعلق گندم کے دانے بھی دریافت ہوۓ  ۔

 

ترتیب و پیشکش : سید اسداللہ ارسلان


متعلقہ تحریریں:

عربوں کی آمد کے  موقع پر ایران کے حالات

 دور ساسانیان

اشکانیان

سلوکیان

سلسلہ  ھخامنشی