• صارفین کی تعداد :
  • 9485
  • 2/8/2014
  • تاريخ :

ايران کا اسلامي انقلاب اميد کي کرن ( حصّہ چہارّم )

ایران کا اسلامی انقلاب امید کی کرن ( حصّہ چہارّم )

اسلامي انقلاب کے وقوع پذير ہونے کے ساتھ ايک بار پھر  مستضعفين کو روئے زمين کي حکومت عطا کرنے والا اللہ کا سچا وعدہ عملي جامہ پہنتے ہوئے نظر آيا اور صاحبان ايمان کو ايک بار پھر زمين کے ايک خطہ ميں الہي حکومت قائم کرنے کا موقع فراہم ہوا- اوراسلام کا چمکتا ہوا سورج ايک بار پھر نئي روح و حيات لے کر سر زمين ايران کي افق سے نمودار ہوا اور دھيرے دھيرے پوري دنيا ميں نور افشاني کرتا ہوا چلا جا رہا ہے- دنيا کے کونے کونے سے اٹھنے واليں اسلامي تحريکيں اسي آقتاب عالمتاب کي روشني ميں اپنا راستہ ڈھونڈتي ہوئي نظر آرہي ہيں- جيسا کہ بين الاقوامي حوادث کے متعلق نظريہ پردازوں نے  انقلاب اسلامي کے ذريعہ حيات مجدد حاصل کرنے والے اسلامي معاشروں کے سلسلے ميں کہا:'' ايران ميں امام خميني کي حکومت کے آغاز کے ساتھ اسلام نے ايک نئي زندگي کا آغاز کر ليا جس نے بہت مختصر وقت ميں  عالمي سطح پر اپنے ايسے سياسي اور ثقافتي آثار و برکات نچھاور کئے جن کي ہر گز پيشنگوئي نہيں کي جا سکتي تھي''-(ماہنامہ اسلام و غرب، شمارہ بہمن و اسفند78 )

'' اسلامي انقلاب اور اس کے رہبر( امام خميني) بے شک اسلام کو نئي زندگي دينے والي تحريک کے موجد ہيں جنہوں نے دوسرے ممالک ميں رہنے والے مسلمانوں کو بھي اپني اسلامي ہويت اور شخصيت کو دوبارا حاصل کرنے کا سليقہ سکھلا ديا- يہ تحريک قوميت سے بالاتر اثر و رسوخ کي حامل ہے''- ( پروفيسر کارسٹن کوپلر، شکل اسلام، ص67)

'' امام خميني نے اسلامي انقلاب کے ذريعہ نہ صرف ايرانيوں اور مشرقي وسطي کو بلکہ پوري دنيا کے لوگوں کو اپنا عاشق بنا ديا''- ( گراہام فولر امريکي، قبلہ عالم، جيوپوليٹيک ايران، ترجمہ عباس مخبر، ص111)

 ''جس طريقہ سے امام خميني نے ايرانيوں کي زندگي کو معني اور مفہوم ديا ہے اسي طريقہ سے کروڑوں مستضعف انسانوں کو زندگي کي اميد دي ہے '' (فتحي شاقي،  تحريک فلسطين کا رہبر، انتفاضہ و طرح اسلامي معاصر، ص87)

 ''آج اسلامي انقلاب کے آثار و برکات ايراني باڈر سے باہر نکل گئے ہيں اور مشرق وسطي ميں سب سے بڑا سياسي اور اسلامي تحريکوں کا محرک اسلامي انقلاب ہے''- ( ڈاکٹر ماروين زونيس، امريکہ يونيورسٹي کا استاد، رسالت نيوز اينجسني کو انٹرويو ديتے ہوئے، 79،11،17)

'' انقلاب امام خميني، مسلمان قوموں کو متحد کرنے کي غرض سے ان  کے اندر اسلامي بيداري کي لہر پيدا کرنے ميں سب سے زيادہ موثر ثابت ہوا ہے '' (شيخ عبد العزيز عودہ، )

'' آج شمال افريقہ سے لے کر ايشيا کے جنوب مشرق تک تمام اسلامي ممالک ميں اسي انقلاب کي وجہ سے اسلامي بيداري کي لہر دوڑ گئي ہے اور ہر آئے دن اس کے طرفداروں ميں اضافہ ہوتا چلا جا رہا ہے''-( پيتر- ال- برگر، معروف امريکي سوشياليسٹ، افول سکولاريزم، ترجمہ افشار اميري، ص23) ( جاري ہے )


متعلقہ تحریریں:

اسلامي انقلاب کے خواتين پر اثرات

اسلامي انقلاب کي کاميابياں