• صارفین کی تعداد :
  • 691
  • 4/11/2013
  • تاريخ :

اسٹريليا کي ايک خاتون شيعہ ہو گئي

اسٹريليا کي ايک خاتون شيعہ ہو گئي

اسٹريليا کي ايک خاتون شيعہ ہو گئي. جب تک زندہ رہوں گي دين اسلام کي تبليغ کروں گي

فاطمہ باسٹين نے يہ بيان کرتے ہوئے کہ دين اسلام عدالت، انصاف، انسانيت اور اخلاق کا دين ہے کہا: ميں نے پوري تحقيق اور جستجو کے بعد دين اسلام قبول کيا ہے-

اہلبيت(ع) نيوز ايجنسي-ابنا- اسٹريليا کي انٹرنيشنل يونيورسٹي ايڈيليڈ کي ملازم کارمن باسٹين (Carmen Bastian) آج 11 اپريل بروز جمعرات کو اپني زبان پر شہادتين جاري کر کے شيعہ مسلمان ہو گئي-

انزالي کے امام جمعہ حجۃ الاسلام و السلمين سيد داوود موسوي نے بتايا کہ اسٹلريليا کي اس خاتون نے شيعہ ہونے کے بعد اپنا نام فاطمہ رکھا ہے-

فاطمہ باسٹين نے يہ بيان کرتے ہوئے کہ دين اسلام عدالت، انصاف، انسانيت اور اخلاق کا دين ہے کہا: ميں نے پوري تحقيق اور جستجو کے بعد دين اسلام کو قبول کيا ہے اور جب تک زندہ رہوں گي اسلام کے اخلاقي اصولوں کي رعايت اور ديني تعليمات کي ترويج کروں گي-

اس مسلمان خاتوں نے انزلي کے رہنے والے ايک مسلمان مرد کے ساتھ شادي کرنے کا فيصلہ کيا ہے-