• صارفین کی تعداد :
  • 516
  • 2/13/2012
  • تاريخ :

امام زمانہ (ع) کي شان ميں گستاخي پر شيعيان کويت سراپا احتجاج

کویت

سينکڑوں کويتي باشندوں نے "الارادہ" اسکوائر پر اجتماع کرکے "لبيک يا مہدي (عج)" کے نعرے لگائے اور محمد المليقي نيز ديگر وہابيوں کے اقدامات کو امام عصر (عج) کي توہين قرار ديتے ہوئے شديد احتجاج کيا اور اس بات پر زور ديا کہ کويت ميں شيعہ سني اخوت کو نقصان پہنچانے کي سازشيں ہورہي ہيں-

اہل البيت (ع) نيوز ايجنسي ـ ابنا ـ کي رپورٹ کے مطابق کويت کے دارالحکومت "الکويت" (يا کويت سٹي) ميں ايک کويتي قلمکار "محمد المليقي" کي طرف سے امام زمانہ عَجَّل اللہُ تَعالي فَرَجَہُ الشَّريف کي شان ميں گستاخي پر کويتي باشندوں نے انتفاضہ کا اعلان کرتے ہوئے شاتم مہدي (ع) کے اقدام پر زبردست احتجاج کيا ہے اور کويت ميں شيعہ سني برادرانہ تعلقات کو نقصان پہنچانے کي وہابيوں کي کوششوں کي مذمت کي ہے-

مقررين نے کہا کہ امام زمانہ عليہ السلام کي شان ميں گستاخي شيعہ سني تعلقات کو مخدوش کرنے کي سازش ہے-

شيعيان کويت نے آگلے 24 گھنٹوں ميں المليقي پر مقدمہ چلانے کے اعلان کا مطالبہ کيا ہے-

الارادہ اسکوائر پر اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کويتي پارليمان (الامہ) کے دو اراکين "فيصل الدويسان" اور "عبدالحميد الدشتي" نے نے حکومت سے مطالبہ کيا کہ وہ وہ المليقي پر مقدمہ چلانے کا فوري اعلان کردے-

فيصل الدويسان نے معترضين کے اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے اہل سنت برادران سے مخاطب کرتے ہوئے کہا: آپ ہمارے بھائي اور ہم وطن ہيں اور يقيناً مسلمانوں کے درميان تفرقہ ڈالنے کي يہ سازش ناکام ہوگي کيونکہ امام زمانہ عليہ السلام تمام مسلمانوں کے امام ہيں-

انھوں نے کويتي عدليہ کي صورت حال پر تنقيد کرتے ہوئے کويت کے وزير اعظم کو شاتم امام (ع) پر مقدمہ چلانے کے لئے 24 گھنٹوں کي مہلت دي اور کہا: ہم فرقہ واريت پر يقين نہيں رکھتے تا ہم اگر حکومت کو دي گئي مہلت مطالبہ پوري ہونے کے بغير ختم ہوجائے تو ہم حکومت کويت کي اپوزيشن کي صورت اختيار کريں گے اور ضروري قانوني اقدامات انجام ديں گے-

الدويسان نے کہا: ياسر الحبيب نامي شخص نے زوجۂ رسول عائشہ بنت ابي بکر کي توہين کي حکومت نے اس کي شہريت منسوخ کردي اور اس کو ملک سے نکال باہر کيا اب المليقي نے جو اقدام کيا ہے وہ ياسر الحبيب اقدام سے کسي طور بھي کم نہيں ہے چنانچہ اس کے خلاف بھي وہي اقدام ہونا چاہئے-

دريں اثناء المليقي نے کہا کہ اس نے حضرت امام زمانہ (عج) کي توہين کا ارتکاب نہيں کيا ہے-