متعلقه تحریریں
  • قرآن ایک جاودان الہی معجزہ ہے
    قرآن ایک جاودان الہی معجزہ ہے
    پیغمبروں کے اکثر معجزات حسّی اثرات کی سلطنت میں اور انہی کے زمانے پر منحصر تھے اور فقط اسی عہد کے لوگ ان کا مشاھدہ کرتے تھے لیکن قرآن کا اعجاز ابدی اور قیامت تک پایدار اور باقی رہنے والا ہے
  • زبان قرآن کی شناخت
    زبان قرآن کی شناخت
    القول:الکلام علیٰ الترتیب ،وھوعند المحققین کلُّ لفظٍ قال بہ اللسان تاما کان او ناقصا.
  • قرآن اور انسان کی مادی ومعنوی ضرورتیں
    قرآن اور انسان کی مادی ومعنوی ضرورتیں
    وہ تمام چیزیں جن کی انسان کو اپنی مادی ومعنوی زندگی میں ضرورت ہے ان کے اصول قرآن کریم میںبیان کر دئیے گئے ہیں چاہے
  • صارفین کی تعداد :
  • 3547
  • 9/14/2009
  • تاريخ :

’’اعجاز قرآن ‘‘ پر سچے واقعات

قرآن الکریم

عید الاضحی کے موقعہ پر دوست احباب کو عید مبارک کہنے کیلئے جب میں نے اپنے ایک مہربان استاد کو فون کیا تو پتہ چلا کہ انہیں کچھ عرصہ پہلے زبان پر فالج کا حملہ ہوا ہے آپ بہائو الدین زکریا یونیورسٹی ملتان کے وائس چانسلر بھی رہے۔ آجکل وہ نیشنل ڈیفنس یونیورسٹی  NDC  میں ایک اعلیٰ تدریسی عہدہ پر فائز ہیں۔ میں نے جب ان سے دریافت کیا کہ زبان کے فالج کے باوجود آپکی گفتگو تو پوری طرح سمجھ آ رہی ہے اور لگتا ہے کہ آپکو بولنے میں بھی دقت محسوس نہیں ہو رہی۔ اس قدر جلد آرام کیسے آیا؟ انہوں نے بتایا کہ میں نے اسلام آباد کے شفا انٹر نیشنل ہسپتال میں بھی علاج کرایا اور نشتر ہسپتال ملتان میں بھی لیکن حقیقی آفاقہ مجھے تلاوت کلام پاک اور درود شریف پڑھنے سے ہوا۔ وہ کہہ رہے تھے کہ ایک بزرگ نے مجھے ہدایت کی میں کلام پاک کی تلاوت با آواز بلند کروں۔ تلاوت سے کلام الٰہی کے الفاظ کے خواص کا اثر بھی ہو گا اور تلاوت کے دوران الفاظ کی ادائیگی سے زبان کے ہر مسل (پٹھے) کی ورزش بھی ہو گی۔ انہوں نے بتایا کہ کلام الٰہی کی حدت اور زبان کے پٹھوں کی حرکت سے دوران خون درست ہونے لگا اور چند ہی دنوں میں اس قابل ہو گیا کہ آسانی سے بات کرسکوں وہ کہہ رہے تھے کہ سب کچھ قران پاک کا معجزہ ہے۔

 

 http://www.nawaiwaqt.com.pk


متعلقہ تحریریں:

قرآن کی فصاحت و بلاغت

قرآن میں تحریف نہیں ہوئی

 قرآن پڑھنے والے فلاح پانے والے ہیں

قرآن کریم پیغمبر اسلام کا سب سے بڑا معجزہ ہے

قارئین کی تازہ ترین آراء
شناخت نہیں ہو ئی
اسلام کی عورتوں کو خدا کا عزاب کا واقعہ
تبیان کا جواب :

تحریر کے متعلق ہمیں اپنی راۓ سے آگاہ کرنے کا شکریہ 
جمعہ 30 مارچ 2012