• صارفین کی تعداد :
  • 2094
  • 5/31/2016
  • تاريخ :

نسیم غدیر کی پہلي حديث 

 ذکر علی (ع)

عن محمّدبن عمّار عن ابيہ عن الصادق جعفر بن محمّد عن ابيہ محمّد بن عليٍّ عن آبا۔ الصاقين(عليہم السلام )قال ،قال رسول اللّہ ( صلّي اللہ عليہ وآلہ وسلّم ):انّ اللہ تبارک وتعالي جعل لاخي علي بن ابي طالب فضائلَ لا يحصي عددھا غيرہ فمن ذکرہ فضيل ً من فضائلہ مقرّاً بھا غفر اللّہ لہ ما تقدّم من ذنبہ وما تأخّر ولو وافي القيام بذنوب الثقلين ومن کتب فضيلً من فضائل علي بن ابي طالب ( عليہ السلام) لم تزل الملائک تستغفر لہ ما بقي لتلک الکتاب رسم ومن استمع الي فضيلٍ من فضائلہ غفر اللّہ لہ الذنوب الّتي اکتسبھا بالاستماع ومن نظر الي کتابٍ في فضائلہ غفر اللّہ لہ الذّنوب الّتي اکتسبھا بالنظر ثمّ قال رسول اللّہ ( صلّي اللہ عليہ وآلہ وسلّم ) النّظر الي عليّ بن ابي طالب ( عليہ السلام) عباد و ذکرہ عباد ولا يقبل ايمان عبدٍ الاّ بولايو البراء من اعدا و صلّي اللّہ علي نبيّنا محمّد و آلہ اجمعين

 ترجمہ: حضرت رسول گرامي اسلام نے فرمايا خدا نے ميرے بھائي علي بن ابي طالب کيلئے بہت فضائل بيان کئے ہيں اور جو بھي حضرت کي ايک فضيلت بيان کريگاجبکہ اپنے مولا کي معرفت رکھتا ہو خدا اس کے گذشتہ اور آئندہ کے گناہ معاف کر ديتا ہے اگرچہ اس کے گناہ تما جنات اور انسانوں کے گناہوں کے برابر ہوں ، او رجو بھي حضر ت علي ( عليہ السلام) کي ايک فضيلت لکھے گا اور جب تک وہ فضيلت لکھي ہوئي باقي رہے گي تو ملائکہ اس کيلئے استغفار کرتے رہيں گے اور جو بھي حضرت علي ( عليہ السلام) کي ايک فضيلت سنے گا خدا اس کے وہ تمام گناہ معاف کر ديگا جو اس نے کانوں کے ذريعے انجام ديئے ہو نگے او ر جو بھي حضرت کي ايک فضيلت کو لکھے گا خدا اس کے آنکھوں کے ذريعے انجام ديئے گئے تمام گناہ معاف کر ديگا اور پھر حضرت رسول گرامي اسلامي نے فرمايا حضرت علي (عليہ السلام ) کي طرف ديکھنا عبادت ہے علي ( عليہ السلام ) کا ذکر کرنا عبادت ہے اور کسي بندے کا ايمان ولايت حضرت علي ( عليہ السلام )اور ان کے دشمنوں بيزاري کے بغير قبول نہيں کيا جائيگا

درود و سلام ہوں حضرت محمد ( صلّي اللہ عليہ وآلہ وسلّم ) اور انکي پاک آل پر۔

(0)  (امالي شيخ صدوق مجلس نمبرص ح نمبر)