• صارفین کی تعداد :
  • 3695
  • 8/30/2013
  • تاريخ :

امام جعفر صادق(ع) کی حدیثیں

امام جعفر صادق(ع) کی حدیثیں

امام جعفر صادق عليه السلام کي چاليس حديثيں(حصّہ اول)

5. قالَ عليه السلام: اذا فَشَتْ ارْبَعَةٌ ظَهَرَتْ ارْبَعَةٌ: اذا فَشاالزِّناكَثُرَتِ الزَّلازِلُ وَ اذاامْسِكَتِ الزَّكاةُ هَلَكَتِ الْماشِيَةُ وَ اذاجارَ الْحُكّامُ فِى الْقَضاءِ امْسِكَ الْمَطَرُ مِنَ السَّماءِ وَ اذا ظَفَرَتِ الذِّمَةُ نُصِرُ الْمُشْرِكُونَ عَلَى الْمُسْلِمينَ.(5)

ترجمہ: جس معاشرے ميں چار چيزيں عام اور اعلانيہ ہوجائيں چار مصيبتيں اور بلائيں اس معاشرے کو گھير ليتي ہيں:

زنا عام ہوجائے، زلزلہ اور ناگہاني موت فراوان ہوگي.

زکواة اور خمس دينے سے امتناع کياجائے، اہلي حيوانات تلف ہونگے.

حکام اور قضات ستم اور بے انصافي کي راہ اپنائيں، خدا کي رحمت کي بارشيں برسنا بند ہونگي.

اور ذمي کفار کو تقويت ملے تو مشرکين مسلمانوں پر غلبہ پائيں گے.

6. قالَ عليه السلام: مَنْ عابَ اخاهُ بِعَيْبٍ فَهُوَ مِنْ اهْلِ النّارِ.(6)

ترجمہ: جو شخص اپنے برادر مۆمن پر تہمت و بہتان لگائے وہ اہل دوزخ ہوگا.

7. قالَ عليه السلام: الصَّمْتُ كَنْزٌ وافِرٌ وَ زَيْنُ الْحِلْمِ وَ سَتْرُالْجاهِلِ.(7)

ترجمہ:خاموشي ايک بيش بہاء خزانے کي مانند حلم اور بردباري کي زينت اور نادان شخص کے جہل و ناداني چھپانے کاوسيلہ ہے.

8. قالَ عليه السلام: إصْحَبْ مَنْ تَتَزَيَّنُ بِهِ وَ لاتَصْحَبْ مَنْ يَتَزَّيَنُ لَكَ.(8)

ترجمہ:ايسے شخص کے ساتھ دوستي اور مصاحبت کرو جو تمہاري عزت اور سربلندي کا باعث ہو اور ايسے شخص سے دوستي اور مصاحبت نہ کرو جو اپنے اپ کو تمہارے لئے نيک ظاہر کرتاہے اور تم سے استفادہ کرنا چاہتا ہے.

9. قالَ عليه السلام: كَمالُ الْمُۆْمِنِ فى ثَلاثِ خِصالٍ: الْفِقْهُ فى دينِهِ وَ الصَّبْرُ عَلَى النّائِبَةِ وَالتَّقْديرُ فِى الْمَعيشَةِ.(9)

ترجمہ: مۆمن کا کمال تين خصلتوں ميں ہے: دين کے مسائل و احکام سے اگاہي، سختيوں اور مشکلات ميں صبر و بردباري، اور زندگي کے معاملات ميں منصوبہ بندي اور حساب و کتاب کي پابندي.

10. قالَ عليه السلام: عَلَيْكُمْ بِاتْيانِ الْمَساجِدِ، فَانَّها بُيُوتُ اللّهِ فِى الارْضِ، و مَنْ اتاها مُتَطِّهِراً طَهَّرَهُ اللّهُ مِنْ ذُنُوبِهِ وَ كَتَبَه مِنْ زُوّارِهِ.(10)

ترجمہ: تمہيں مساجد ميں جانے کي سفارش کرتا ہوں کيوں مساجد روئے زمين پر خدا کے گھر ہيں اور جو شخص پاک و طاہر ہوکر مسجد ميں وارد ہوگا خداوند متعال اس کو گناہوں سے پاک کردے گا اور اس کو اپنے زائرين کے زمرے ميں قرار دے گا.

11. قالَ عليه السلام: مَن قالَ بَعْدَ صَلوةِالصُّبْحِ قَبْلَ انْ يَتَكَلَّمَ: ((بِسْمِ اللّهِ الرَّحْمنِ الرَّحيمِ وَ لاحَوْلَ وَ لا قُوَّةَ الا بِاللّهِ الْعَلىٍّّ الْعَظيمِ يُعيدُهاسَبْعَ مَرّاتٍ، دَفَعَ اللّهُ عَنْهُ سَبْعينَ نَوْعاً مِنْ انْواعِ الْبَلاءِ، اهْوَنُهَا الْجُذامُ وَ الْبَرَصُ.(11)

ترجمہ: جو شخص نماز فجر کے بعد کوئي بھي بات کئے بغير 7 مرتبه «بسم اللّه الرّحمن الرّحيم، لاحول و لاقوّة الاباللّه العليّ العظيم » کي تلاوت کرے گا خداوند متعال ستر قسم کي آفتيں اور بلائيں اس سے دور فرمائے گا جن ميں سب سے ساده اور کمترين آفت برص اور جذام ہے.

12. قالَ عليه السلام: مَنْ تَوَضَّأ وَ تَمَنْدَلَ كُتِبَتْ لَهُ حَسَنَةٌ وَ مَنْ تَوَضَّأ وَ لَمْ يَتَمَنْدَلْ حَتّى يَجُفَّ وُضُوئُهُ، كُتِبَ لَهُ ثَلاثُونَ حَسَنَةً.(12)

ترجمہ: جو شخص وضو کرے اور اسے تولئے کے ذريعے خشک کردے اس کے لئے صرف ايک حسنه ہے اور اگر خشک نه کرے اس کے لئے 30 حسنات ہونگے (جاری ہے)

 

حوالہ جات:

5- وسائل الشيعة : ج 8 ص 13.

6- اختصاص : ص 240، بحارالا نوار: ج 75، ص 260، ح 58.

7- مستدرك الوسائل : ج 9 ص 16 ح 4.

8- وسائل الشيعه : ج 11 ص 412.

9- أمالي طوسى : ج 2 ص 279.

10- وسائل الشيعة : ج 1 ص 380 ح 2.

11- امالى طوسى : ج 2 ص 343.

12- وسائل الشيعة : ج 1 ص 474 ح 5.


متعلقہ تحریریں:

"علم " بنظر امام صادق

شيعيت کو نابودي سے بچانے کيلئے امام جعفر صادق کا اقدام