• صارفین کی تعداد :
  • 1405
  • 7/14/2012
  • تاريخ :

مولانا نوراني اور حسيب زيدي کو ذبح کرکے

مولانا نوراني اور حسيب زيدي کو ذبح کرکے

کالعدم (مگر سرگرم) دہشت گرد ٹولوں کے دہشت گردوں نے سرگودھا ميں دو شيعہ ہونے والے بھائيوں کو اور کوئٹہ سے اغوا کرکے مولانا نور علي نوراني اور سيد حسيب زيدي کو ذبح کر کے شہيد کرديا ہے- رحمت علي کو کوئٹہ کے کيراني روڈ پر ٹارگٹ کلنگ کا نشانہ بنا کر شہيد کيا گيا-

  اہل البيت (ع) نيوز ايجنسي ـ ابنا ـ کي رپورٹ کے مطابق ايک طرف سے سرگودھا ميں شيعہ ہونے والے بھائيوں کو شہيد کيا ہے تو دوسري طرف سے ايک ہفتہ قبل اغوا ہونے والے مولانا نور علي نوراني اور حسيب زيدي کو ناصبي دہشت گردوں نے ذبح کرکے شہيد کرديا ہے- تفصيلات کے مطابق کوئٹہ ميں مولانا نور علي نوراني اور حسيب زيدي کو کچھ دن قبل کالعدم دہشت گرد ٹولوں کے دہشت گردوں نے اغوا کرليا تھا اورمولانا نور علي ہمداني کے اہل خانہ سے 50 لاکھ روپے تاوان کا مطالبہ کرکے ثابت کيا تھا کہ ان کا کوئي مذہب نہيں ہے بلکہ پيشہ ور درندے اور جرائم پيشہ ہيں- تاوان ادا ہونے کے  باوجود خونخوار درندوں نے مولانا کو ذبح کرکے شہيد کرديا اور ان کي ميت کو نوکنڈي روڈ پر پھينک ديا- مصدقہ اطلاعات کے مطابق مولانا نور علي نوراني اور حسيب زيدي کو شہيد کرديا گيا ہے- کوئٹہ کے امام جمعہ اور مجلس وحدت مسلمين کے صوبائي رہنما مولانا سيد ہاشم موسوي نے اس بات کي تصديق کي ہے کہ مولانا نور علي نوراني اور حسيب زيدي کو شہيد کرديا گيا ہے-دريں اثنا کوئٹہ کے علاقے کيراني روڈ پر کالعدم دہشت گرد ٹولوں کے دہشت گردوں نے فائرنگ کر کے ايک شيعہ باشندے رحمت علي کو شہيد کر ديا ہے- شيعہ کلنگ کے مطابق کے مطابق کوئٹہ کے علاقے کيراني روڈ پر کالعدم دہشت گرد گروہوں سپاہ صحابہ،لشکر جھنگوي اور طالبان دہشت گردوں کے ناصبي يزيدي دہشت گردوں نے فائرنگ کا نشانہ بناتے ہوئے رحمت علي ولد جمعہ علي کو شہيد کر ديا ہے - عيني شاہدين کاکہنا تھا کہ رحمت علي کو ناصبي وہابي دہشت گردوں نے ٹارگٹ کلنگ کا نشانہ بنايا-شہيد رحمت علي کے سر اور سينے ميں گولياں لگي ہيں جبکہ شہيد کے جسد خاکي کو بلوچستان ميڈيکل سينٹر ميں منتقل کر ديا گيا ہے-