• صارفین کی تعداد :
  • 3487
  • 11/15/2010
  • تاريخ :

بغیر ڈرائیور کی گاڑیوں کی کامیاب آزمائش

بغیر ڈرائیور کی گاڑی

ڈرائیور کے بغیر چلنے والی چار برقی گاڑیوں نے اٹلی سے چین تک کا آٹھ ہزار کلومیٹر پر مشتمل آزمائشی سفر کامیابی سے مکمل کر لیا ہے۔

ان گاڑیوں کا سفر جمعرات کو شنگھائی میں جاری نمائش پر ختم ہوا ۔

ان گاڑیوں میں شمسی توانائی سے چلنے والے لیزر سکینر اور سات ویڈیو کیمرے نصب ہیں جو راستے میں آنے والی رکاوٹوں کی نشاندہی کر کے گاڑی کو تصادم سے محفوظ رکھتے ہیں۔

یہ گاڑیاں سڑکوں کو محفوظ رکھنے اور جدید آٹوموٹو تکنیک کے مشترکہ منصوبے کے تحت بنائی گئی ہیں اور ان پر نصب سنسر انہیں مختلف قسم کی سڑکوں، ٹریفک اور موسمی حالات سے نبرد آزما ہونے کی صلاحیت عطا کرتے ہیں۔

تجربے کے دوران گاڑیوں کی زیادہ سے زیادہ رفتار ساٹھ کلومیٹر فی گھنٹہ رہی اور انہیں ہر دو سے تین گھنٹے کی ڈرائیونگ کے بعد آٹھ گھنٹے تک ریچارج کیا گیا تھا۔ایک کمپیوٹرائزڈ آرٹیفیشل وژن سسٹم جسے’گولڈ‘ کا نام دیا گیا ہے، ان سنسرز سے حاصل شدہ معلومات کا تجزیہ کرتا ہے اور خودکار طریقے سے گاڑی کی سمت اور رفتار متعین کر دیتا ہے۔ گاڑی کا سٹرینگ ایک کمپیوٹر کنٹرول کرتا ہے۔

ان گاڑیوں کی مدد سے تحقیق کرنے والی یورپی تحقیقی کونسل کی ایزابیلا فریدگا کا کہنا ہے کہ ’ہمیں راستوں کا پتہ نہیں۔ ہم نہیں جانتے کہ سڑک کیسی ہوگی یا ہمیں کہاں بہتر سڑک، کم یا زیادہ ٹریفک، ماہر یا کم مہارت کے حامل ڈرائیور ملیں گے۔ اس لیے ہمیں بہت سی چیزوں سے نمٹنا پڑتا ہے‘۔

اگرچہ ان گاڑیوں میں نہ تو کوئی ڈرائیور موجود تھا اور نہ ہی انہیں نقشوں کی مدد حاصل تھی تاہم محققین نے ان میں بطور مسافر سفر کیا تاکہ ہنگامی حالات پیدا ہونے کی صورت میں صورتحال پر قابو پایا جا سکے۔تجربے کے دوران محققین کو اس وقت کنٹرول ہاتھ میں لینا پڑا جب گاڑیاں سڑکوں پر موجود ٹول سٹیشنز پر پہنچیں۔

تجربے کے دوران گاڑیوں کی زیادہ سے زیادہ رفتار ساٹھ کلومیٹر فی گھنٹہ رہی اور انہیں ہر دو سے تین گھنٹے کی ڈرائیونگ کے بعد آٹھ گھنٹے تک ریچارج کیا گیا تھا۔

بی بی سی ڈاٹ  کام


متعلقہ تحریریں:

گوس خلائی مشن میں دوبارہ تکنیکی خرابی

علم ادوِیہ سازی (Pharmacology)

علم جراحت (Surgery)

علم طب (Medical Science)

علم نباتات (Botany)

موبائل فون کنکشنز کی تعداد کمپیوٹرز سے تین گنا بڑھ گئی

علم بصریات (Optics)

سورج کی سرگرمی میں اضافہ، انسانی ٹیکنالوجی کو نقصان پہنچنے کا اندیشہ

سماعت کی خرابی کی وجہ سے زبان سیکھنے کی استعداد متاثر ہوتی ہے

موبائل فون کے اخلاقی اور جسمانی نقصانات